ایک یہودی نے جب آپ ﷺ کو دیکھا تو

ایک یہودی نے جب آپ ﷺ کو دیکھا تو

یہود کو علم تھا کہ ایک نبی آنے والا ہے اور ایک ایسے علاقہ کی طرف جائے گا جس میں باغات ہو نگے ۔ اس وجہ سے اکثر یہودیوں نے مدینہ میں پڑاؤ ڈال لیا تھا ان کا خیال تھا کہ یہ نبی بھی ان کی نسل میں سے ہو گا ۔

لیکن جب  مکے میں آپ ﷺکی پیدائش کے دنوں ایک یہودی آیاہوا تھا. اس یہودی نے آپ ﷺ کی پیدائش کے دن صبح صبح شور مچایا کہ کسی قریشی کا بیٹا پیدا ہوا ہے جو یتیم پیدا ہوا ہو؟ کہاگیا کہ ہاں.

عبد المطلب ؓ کا پوتا پیدا ہوا ہے.جس پر یہودی کہنے لگا کہ مجھے وہ دکھائو. جب آپ ﷺ کو اس کے سامنے لایا گیا تو اس نے آپ ﷺ کی کمر سے کپڑا ہٹایا تو اس کی نظر مہر نبوت پر پڑی اور اس کی چیخ نکل گئی واویلہ کرتے ہوئے شور مچانے لگا لوگوں نے جب پوچھا کہ کیا  ماجر  ہ ہ ےتو  کہنے لگا کہ ہلاک ہو

 

گئے بنی اسرائیل. آج نبوت اسرائیل کی اولاد سے نکل گئی. اے قریش! تمہیں مبارک ہو.یہ نبوت تمہارے گھر میں آ گئی ہے اور ایک دن اس کی بادشاہت اور نبوت پورے دنیا کو گھیر لے گی .

Leave a Reply