کمپیوٹر استعمال کرنےوالے ہر شخص نے یہ تصویر دیکھی ہوگی لیکن حقیقت میں یہ تصویر کون سی جگہ کی ہے

کمپیوٹر استعمال کرنےوالے ہر شخص نے یہ تصویر دیکھی ہوگی لیکن حقیقت میں یہ تصویر کون سی جگہ کی ہے

ونڈوز سسٹم کو استعمال کرنے والا ہر شخص ایک تصویر کو جانتا ہوگا جو کہ ونڈوز ایکس پی میں ببطور ڈیفالٹ وال پیپر کے طور پر استعمال ہوتی تھی یہ ایک ایسی تصویر ہے جس کو سب سے زیادہ دیکھا گیا ہے اور اس کو سب سے زیادہ پسند بھی کیا گیا ونڈوز میں اس تصویر کا نام ” بلس” تھا جو کہ 16 سال سے زیادہ استعمال رہا ۔ بہت کم لوگ جانتے ہیں کہ قدرتی طور پر اس حسین جگہ کی تصویر کب اور کس نے اور کہاں لی تھی ۔

یہ تصویر مشہور فوٹو گرافر چک او ریئر نے 1996 میں لی تھی جب وہ اپنی معشوقہ سے ملنے کیلیفورنیا سے گزر رہے تھے اس جگہ کا نام سومو کاؤنٹی ہے یہاں سے گزرتے ہوئے چک اورئیر کو ییہ حسین جگہ نظر آئی تو فورا اس جگہ کو کیمرے کی آنکھ میں محفوظ کر ڈالا یہ تصویر فوربس کو بھیجی گئی جہاں سے مائکروسافٹ نے خرید لی جو کہ 2000 کا سال تھا اور اس کے بعد اس کو ونڈوز ایکس پی استعمال کیا گیا ۔

چک اورئیر کی اس وقت 76 سال عمر ہے اس کا کہنا ہے کہ میری اس تصویر کو سب سے زیادہ پسند کیا گیا اور اس سے مجھے خوب شہرت ملی چک اورئیر آج بھی بہترین تصاویر کی تلاش میں رہتے ہیں جبکہ حال میں ان کا جرمنی کی ایئرلائن لفتھانزا کے ساتھ ایک معاہدہ ہوا ہے ۔
اس منصوبے کا نام ’نیواینجلس آف امریکا‘ رکھا گیا ہے تاکہ نئی نسل کے سمارٹ فون کیلئے وال پیپر بنائے جاسکیں۔ چارلس کے بقول اب سمارٹ فون فوٹوگرافی دیکھنے کا ایک اہم ذریعہ بن چکے ہیں۔

لفتھانزا ائیرلائنز کیساتھ ہونے والے معاہدے کے بعد چک اورئیر کی جانب سے کھینچی گئی 3 تصاویر بھی منظرعام پر آ گئی ہیں جنہیں دیکھ کر ہر کوئی یہ ضرور کہہ سکتا ہے کہ چک اورئیر نے اپنے فن کا خوب بھرم رکھا ہے اور یہ ثابت کر دیا ہے کہ تجربے کو کوئی مات نہیں دے سکتا۔

Leave a Reply