ایک لڑکی کو جنسی درندگی کے بعد ایسے طریقے سے قتل کیا گیا کہ

ایک لڑکی کو جنسی درندگی کے بعد ایسے طریقے سے قتل کیا گیا کہ

نئی دلی(نیوز ڈیسک) پوری دنیا میں گینگ ریپ کے لئے مشہور ملک بھارت کے  ریاست ہریانہ سے ایک ہفتہ قبل اغوا ہونے والی لڑکی کی تشدد زدہ لاش ملی ۔ لیکن اس کی ظاہری صورت اور حلیہکو دیکھ کر لوگوں کے ہوش اڑ گئے ۔

اس بدقسمت 15 سالہ لڑکی کی لاش   پر 19 گہرے زخم تھیں، جسم کے سب اہم اعضاء یعنی پھیپھڑیں ، جگر اور دل تک کٹے ہوئے تھے ۔ پوسٹمارٹم کے مطابق  کم از کم چار مختلف افراد نے اسے جنسی درندگی کا نشانہ بنایا ہے۔جب  اجتماعی عصمت دری  ، شدید درندگی   اور شدید جسمانی تشدد سے ان کا دل نہ بھرا تو شیطانیت کا مضاہرہ کرتے ہوئے اس کے نازک حصہ میں لکڑی کا ایک بڑا ٹکڑا داخل کر دیا

یہ قسمت کی ماری ہوئی لڑکی سکول سے واپسی پر لا پتہ ہوئی تھی اور اس کی لاش شہر سے 100 میٹر کی دوری پر ایک نہر کے قریب برہنہ حالت میں ملی۔ دیکھنے والوں کے مطابق اس کے جسم ہر عضو سے خون رس رہا تھا ۔  پوسٹمارٹم رپورٹ کے مطابق لڑکی کے جسم کو لہولہان کرنے کے بعد اسے ڈبویا بھی گیا تھا۔ پولیس واقعے کی تفتیش کر رہی ہے لیکن تاحال درندہ صفت مجرموں کا کوئی سراغ نہیں مل سکا۔

Leave a Reply