دھواں دار بیٹنگ سے مخالفین کے پرخچے اڑا دینے والے پاکستانی بلے بازفخر زمان بارے انتہائی افسوسناک خبر آگئی

دھواں دار بیٹنگ سے مخالفین کے پرخچے اڑا دینے والے پاکستانی بلے بازفخر زمان بارے انتہائی افسوسناک خبر آگئی

لاہور ( آن لائن) پاکستان کرکٹ بورڈ (پی سی بی) کے سابق چیف سلیکٹر عامر سہیل نے دھواں دار بلے بازی کرنے والے نوجوان اوپنر فخر زمان کے بارے میں انتہائی تشویشناک بات کہہ دی ہے۔

عامر سہیل کا ماننا ہے کہ بائیں ہاتھ بلے بازی کرنے والے فخر زمان کی ”گولڈن بیٹنگ“ ختم ہو گئی ہے کیونکہ چیمپینز ٹرافی میں قابل ذکر ”کارنامہ“ سرانجام دینے کے بعد مخالف ٹیمیں ان کی کمزوریوں کو بھانپ چکی ہیں ڈفخر زمان نے چیمپینز ٹرافی کے فائنل میچ میں بھارت کیخلاف سنچری سکور کی تھی

جس کے بعد محمد عامر نے اپنی طوفانی باؤلنگ کے ذریعے بھارتی بیٹنگ لائن کے پرخچے اڑا دئیے اور اس طرح پاکستان یہ انتہائی اہم ٹورنامنٹ جیتنے میں کامیاب ہوا تھا۔ عامر سہیل نے ایک انٹرویو میں گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ”یہ دیکھنا بہت افسوس کی بات ہے کہ فخر زمان کو چیمپینز ٹرافی میں عمدہ کارکردگی کی بدولت جتنی کامیابی ملی،

وہ بعد میں اپنی کارکردگی دہرانے میں ناکام رہے۔  اس کی سادہ سی وجہ یہ ہے کہ وہ چیمپینز ٹرافی کے بعد بہت سی مخالف ٹیمیں ان کے بارے میں زیادہ نہیں جانتی تھیں۔ وہ نئے اور مخالفین کیلئے سرپرائز پیکیج تھے۔

اس کے بعد دیگر ٹیموں نے ان پر کام کرتے ہوئے ان کی کمزوریاں دیکھیں اور ایسے طریقے ڈھونڈ نکالے ہیں جن سے وہ بالکل بھی خطرناک نہیں رہے۔“ عامر سہیل نے فخر زمان کی کمزوریوں کی نشاندہی بھی کی اور یہ بھی کہا کہ ان کمزوریوں کو دور کرنے کیلئے فخر زمان کی وہ مدد بھی نہیں کی جا رہی جس کی انہیں ضرورت ہے۔

انہوں نے کہا کہ ”میری رائے کے مطابق، ان کا سارا مسئلہ ’بیک لفٹ‘ اور گیند سے پہلے نیچے کی جانب جھکنا ہے ۔ اصل مسئلے کے علاوہ چونکا دینے والی بات یہ ہے کہ کوچز کی پوری ’فوج‘ ہونے کے باوجود کوئی ایک بھی فخر زمان کے مسئلے کو حل نہیں کر پا رہا۔“

عامر سہیل نوجوان بلے باز کو فضول معلومات دینے پر بھی شکایت کرتے نظر آئے، جو ان کے خیال میں مسائل کے حل کے بجائے نوجوان کھلاڑی کیلئے مزید پریشانیوں کا باعث بن رہی ہیں۔

Leave a Reply