یہ بدقسمت لڑکی کون ہے

یہ بدقسمت لڑکی کون ہے

پشاور میں پیش آنے والا افسوس ناک واقعہ جس نے سنا اس کی آنکھ اشک بار ہو گئی جانئیے آپ بھی رشتے کے تنازعے پر پشاور میں تین افراد کو قتل کر دیا گیا۔ تفصیلات کے مطابق کاکشال کا رہائشی فضل اکبر آفریدی نامی شخص بریخنا نامی ایک دوشیزہ سے شادی کا خواہش مند تھا۔ فضل اکبر نے متعدد بار بریخنا کے گھر والوں سے اس کا ہاتھ مانگا مگر اسے سختی سے انکار کر دیا گیا جس پر مشتعل ہو کر فضل اکبر نے لڑکی کے باپ کو ذبح کر دیا اور پھر خودکشی کر لی۔ پولیس کے مطابق فضل اکبر آفریدی نامی ایک شخص یکہ توت کے علاقے میں پینسٹھ سالہ شہری کے گھر پہنچا

اور اس سے اسکی بیٹی کا رشتہ مانگا۔ بریخنا نامی یہ لڑکی مقامی ڈانسر تھی اور تقریبات میں اپنی صلاحیتوں کا مظاہرہ کرے خاندان کا پیٹ پالتی تھی ۔بریخنا کے والد کے انکار پر فضل اکبر مشتعل ہو گیا اور اس نے تیز دھار آلے سے بریخنا کے والد حضرت گل کا گلا کاٹ دیا ۔ اپنے باپ بچانے کی کوششوں میں بریخنا کو بھی شدید زخم آئے۔ جس کے بعد فضل اکبر نے خود پر بھی گولی چلا دی اور موقع پر جان دے دی ۔

بریخنا کو شدید زخمی حالت میں اسپتال منتقل کیا گیا ۔ مگر وہ جانبر نہ ہوسکی ، پولیس نے تینوں لاشیں پوسٹمارٹم کے لیے بھجوا دیں اور تفتیش شروع کر دی ہے۔ اس بہیمانہ واردات کے بعد اداکارہ صنم بلوچ نے اپنے ایک ٹویٹ میں بریخنا کے قتل کی مذمت کرتے ہوئے عدلیہ سے مطالبہ کیا کہ وہ اداکارہ کے لواحقین کو انصاف فراہم کرے۔نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کیجئیے

Leave a Reply